شب ہجراں کی اذیت کی خبر کس کو ہے

January 28, 2021
complaint
0 0

شب ہجراں کی اذیت کی خبر کس کو ہے
میری گمنام محبت کی خبر کس کو ہے
کس کو احساس میرے شدت جذبات کا ہے
میرے حالات میری وحشت کی خبر کس کو ہے
کون ویران محلوں کی خبر رکھتا ہے
میری اجڑی ہوئی قسمت کی خبر کس کو ہے
میں نے چپ چاپ محبت کے ڈھیروں سِتم جھِیلیں ہیں
میری اِس درجہ شرافت کی خبر کس کو ہے
کون آئے گا اے دل تجھ کو تسلی دینے
تیری اداس طبیعت کی خبر کس کو ہے

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *